محافظ

Shehryar Khawar

fc-balochistan-arrests-6-terrorists

سورج سوا نیزے پر کھڑا دہک رہا تھا. نیلے شفاف آسمان پر کہیں کہیں آوارہ بادلوں کے ٹکڑے رینگ رہے تھے اور اتنی آہستگی سے اپنی شکل تبدیل کر رہے تھے کے دیکھنے والوں کو احساس تک نا ہوتا تھا. گرم ہوا کے تھپیڑے منہ پر پڑتے تو یوں معلوم ہوتا تھا کے جیسے تندور کے دہانے پر جھکے اندر جھانک رہے ہوں. دور حد نگاہ تک زمین سے ابھرے ریت اور مٹی کے ٹیلے دیکھ کر یوں لگتا تھا کے جیسے وہ جنوبی بلوچستان کا صحرائی علاقہ نا ہو بلکہ غریب جنوں کا کوئی قبرستان ہو

View original post 5,779 more words

Advertisements

One thought on “محافظ

Leave a Reply

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s